چارباغ میں دسترخواں اور مفت افطاری کی سہولت سے ہزاروں لوگ مستفید

سوات (زما سوات ڈاٹ کام ، تازہ ترین۔ 23 مئی 2018ء) سوات کے گاوں چارباغ میں صوبے کا سب سے بڑا رمضان دسترخواں سج گیا، غریب ، یتیم ، مسکیں اور بے روزگار افراد ہر روز ہزاروں کی تعداد میں دسترخواں اتے ہیں، سولہ سال سے مسلسل رمضان المبارک کے بابرکت مہینے میں یہ دسترخواں پورا مہینہ لوگوں کو مفت کھانے کی سہولت فراہم کرتا ہے، سوا ت کے تحصیل چارباغ میں مخیر شخص حاجی جہانزیب روزانہ بڑے بڑے دیگوں میں کھانا تیار کرتا ہے جس کی مالی مدد دیگرمخیر حضرات کرتے ہیں، حاجی جہانزیب بارہ دیگوں میں روزانہ کھانا تیار کرکے عصر کے نماز کے بعد تقسیم کرنا شروع کردیتا ہے اور جو نماز مغرب تک جاری رہتا ہے، روزانہ ہزاروں افراد اس دسترخواں کا رخ کرکے اپنے گھر والوں کیلئے کھانا لے جاتے ہیں جبکہ مسافر لوگ دسترخواں پر بیٹھ کر افطاری کرتے ہیں رمضان المبارک کے پہلے روزے سے لے کر تیسویں روزے تک اس جگہ پر روازنہ ہزاروں افراد مفت کھانے سے مستفید ہوتے ہیں۔ حاجی جہانزیب کا کہنا ہے کہ انہوں نے کچھ دوستوں کی مدد سے سولہ سال پہلے ایک سے دو دیگ کھانا تیار کرکے غریبوں میں تقسیم کرنے کا سلسلہ شروع کیا تھا۔ لیکن جب جب یہ بات ان کے دیگردستوں تک پہنچی، تو انہوں مالی تعاون شروع کیا۔ اب وہ سیکڑوں کے بجائے ہزاروں افراد کو روزانہ مفت کھانا فراہم کر رہے ہیں۔ حاجی جہانزیب کے مطابق یہ کھانا زکوٰۃ کی رقم سے تیار نہیں کیا جاتا۔ اس لئے غریب اور نادرا افراد کے علاوہ عام لوگ بھی یہ کھانا حاصل کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک جذبہ ہوتا ہے کہ کیوں نا غریب لوگوں کو بھی وہ کچھ کھلایا جائے جو ہم خود کھاتے ہیں۔ چارباغ میں حاجی جہانزیب اور ان کے دوستوں کی جانب سے ماہِ صیام میں ہر روز غریب لوگوں میں راشن بھی تقسیم کیا جاتا ہے۔ صبح سے سیکڑوں مستحق افراد میں آٹا اور دیگر اشیائے خورد و نوش کی تقسیم کا سلسلہ شروع ہوتا ہے جو دوپہر تک جاری رہتا ہے۔ آٹا اور راشن اُن افراد کو دیا جاتا ہے جو مستحق ہوں، رمضان کے دوران ان کو مزدوری نہ ملی ہو اوران کے گھر میں کھانے کے لئے کچھ نہ ہو۔ مستحق افراد کا کہنا ہے کہ جب ان کو رمضان میں کوئی کام نہیں ملتا، تو ان کو پریشانی نہیں ہوتی۔ کیوں کہ ان کو یقین ہوتا ہے کہ حاجی جہانزیب کی طرف سے ان کو راشن اور تیار کھانا ملے گا۔بشیگرام مدین کا رہائشی ادھیڑ عمر محمد رشاد کا کہنا ہے کہ وہ کئی سالوں سے روزگار کے سلسلے میں چارباغ میں مقیم ہے اور پچھلے بارہ سالوں سے ان کو یہاں سے مفت راشن اور تیار کھانا ملتا ہے۔ چارباغ میں رمضان المبارک کے مہینے میں لوگوں کو ملنے والے تیار کھانے کے بارے میں لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ کھانا انتہائی ذائقہ دار ہوتا ہے۔ اس کھانے کی لذت باقی کھانوں سے زیادہ ہے۔ کھانا لینے کے لئے آنے والے ایک بچے افسر علی کا کہنا تھا کہ ہمارے گھر میں افطاری کے لئے کھانا تیار کیا جاتا ہے، لیکن گھر میں جتنے بھی کھانے بنتے ہوں، ان سب سے حاجی جہانزیب کے مفت کھانے کا زائقہ بہتر ہوتا ہے۔ اس لئے وہ روزانہ یہ کھانا لے کر جاتے ہیں۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ ان کو روزانہ الگ الگ کھانا تیار کرکے دیا جاتا ہے جس میں آلو گوشت سے لے کر سبزی اور مختلف قسم کے دال کا کھانا بھی ہوتا ہے۔

Facebook Comments