بنڑپولیس کو روزہ لگ گیا، ڈی ایس پی سٹی حبیب اللہ کی ایماء پر نوجوان کو تشددکا نشانہ بناکر حوالات میں بند کردیا،

سوات (زما سوات ڈاٹ کام ، تازہ ترین۔ 13 جون 2018ء) بنڑپولیس کو روزہ لگ گیا، ڈی ایس پی سٹی حبیب اللہ کی ایماء پر نوجوان کو تشددکا نشانہ بناکر حوالات میں بند کردیا گیا، تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز نوجوان سمیع اللہ سکنہ طاہر آباد بنڑپولیس سٹیشن میں ملزم کیلئے افطاری لے گیا جہاں پر پولیس سٹیشن میں موجود محررسمیت پانچ اہلکاروں نے ڈی ایس پی سٹی حبیب اللہ کی ایماء پراسے شدید تشدد کا نشانہ بناکر حوالات میں بند کردیا جب اس سلسلے میں ڈی ایس پی سٹی کو کال کی گئی تو موصوف نے کال وصول کرنے کی زحمت تک گوارہ نہیں کی ،یاد رہے کہ اس سے قبل بھی ڈی ایس پی سٹی کے سرکل میں پولیس گردی کے کئی واقعات ہو چکے ہیں جس کی انکوائری فائل میں بند پڑی ہے ، جب نوجوان سمیع اللہ نے آئی جی کمپلنٹ سیل پر شکایت کی تومحرر نے خود کو اور پیٹی بند بھائیوں کو بچانے کیلئے رپورٹ دی کہ مذکورہ نوجوان پولیس سٹیشن میں موجود ملزمان کی تصویر بنا رہا تھا اور یہ بھی کہا کہ مذکورہ نوجوان پولیس سٹیشن آکر مجھ سے غیرقانونی کام کراتا ہے ، انکار پر مجھے بے جا تنگ کرتا ہے ،دوسری جانب علاقہ عوام پولیس گردی کیخلاف سراپا احتجاج بن گئے اورحکام سے مداخلت کا مطالبہ کردیاہے۔

Facebook Comments