ساجد علی سالارزئی

کتنا بدل گیا انسان
غریب الوطن