Browsing Tag

Fazal Maula Zahid

یہ دیس ہے دادی بلورستانی کا (ساتواں حصہ)

دن گیارہ بجے ہمارے ’’صبح سویرے‘‘ کا آغاز ہوا چاہتا ہے۔ بسم اللہ، تیسری صبح ہے۔ ’’فریضۂ ناشتہ‘‘ کی انجام دہی کے بعد قافلہ، وادیٔ ُہنزہ پر حملہ آور ہونے نکل پڑتا ہے۔ درجن بھر لوگ، تین گاڑیوں کے انجن، موبائل فونز کے بھرپور شور شرابے، جتنی مُنھ اتنی باتیں اور سامانِ رقص و سرود کے ساتھ ہنزہ جیسے خاموش اور پُرامن علاقے کی طرف نکل پڑتے ہیں، تو ایسے…
Read More...