سوات : منگلور میں اندھے قتل کا سراغ لگالیا گیا،مقتول کا قاتل اپنا ہی بیٹا نکلا

سوات (زما سوات ڈاٹ کام) سوات کے علاقہ منگلور میں اندھے قتل کا سراغ لگالیا گیا،مقتول کا قاتل اپنا ہی بیٹا نکلا،25دن بعد قبرکشائی کرکے پوسٹ مارٹم میں تشدد کا ثبوت ملنے پر بیٹے کو گرفتار کرلیا گیا،بیٹے نے پولیس کے سامنے اعتراف جرم کرلیا،جرم چھپانے کے جرم میں پولیس نے مقتول کی بیوہ کو بھی حراست میں لے لیا،مقتول کے کی والد ہ کی درخواست پر کارروائی عمل میں لائی گئی،ڈ ی ایس پی سیدوشریف سرکل اکبر حیات خان اور ایس ایچ او منگلور الطاف حسین نے میڈیا کو تفصیلات بتاتے ہوئے ملزم کو بھی میڈیا کے سامنے پیش کردیا گیا،انہوں نے کہاکہ 17ستمبر 2019کو منگلور کے موضع راحت آباد میں پچپن سالہ سید اکبر خان کو سیدوشریف اسپتال لے جاکر حرکت قلب بند ہونے کا ڈرامہ رچاکر سپردخاک کردیا گیا 19ستمبر کوپولیس نے اطلاع ملنے پر انکوائری شروع کردی اور 12اکتوبر کو مجسٹریٹ کی موجودگی میں قبرکشائی کرکے پوسٹ مارٹم کیا گیا جس میں مقتول کی موت تشدد سے واقع ہونا ثابت ہوگیا جس پر پولیس نے مقتول کے بیٹے اکیس سالہ حضرت علی کو گرفتار کرلیا ہے اور جرم چھپانے کی پاداش میں مقتول کی بیوہ مسماۃ زہرا کو بھی حراست میں لے لیا گیا پولیس نے دعویٰ کیا کہ ملزم نے اعتراف جرم کرلیا ہے اور انہوں نے قتل کی وجہ رقم کا تنازع بتایا ہے تاہم اس ضمن میں مزید تفتیش کی جارہی ہے۔

ملتی جلتی خبریں
Comments
Loading...