مقناطیسی پٹی والے اے ٹی ایم کارڈز کی بندش پر اسٹیٹ بینک کا بیان

موجودہ مقناطیسی پٹی والے اے ٹی ایم کارڈز کام کر رہے ہیں۔ اس حوالے سے زیرگردش افواہیں جھوٹ پر مبنی ہیں۔

افواہیں گردش کر رہی تھیں کہ مقناطیسی پٹی والے موجودہ اے ٹی ایم کارڈز نے 31 دسمبر 2019 سے کام کرنا بند کردیا ہے۔

اسلام آباد(ویب ڈیسک): گزشتہ کئی دنوں سے یہ افواہیں گردش کر رہی تھیں کہ مقناطیسی پٹی والے موجودہ اے ٹی ایم کارڈز نے 31 دسمبر 2019 سے کام کرنا بند کردیا ہے۔

تاہم اب اسٹیٹ بینک نے وضاحت کی ہے کہ موجودہ مقناطیسی پٹی والے اے ٹی ایم کارڈز کام کر رہے ہیں۔ اس حوالے سے زیرگردش افواہیں جھوٹ پر مبنی ہیں۔

اسٹیٹ بینک نے ایک پریس ریلیز میں ان افواہوں کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ جن لوگوں کو اب تک PIN اور EMV چپ والے کارڈ موصول نہیں ہوتے اور وہ اسے فعال نہیں بناتے تب تک موجودہ کارڈز بلاک نہیں ہوں گے۔
پریس ریلیز میں مزید کہا گیا ہے کہ ای ایم وی چپ اور پن والے کارڈز موجودہ مقناطیسی چپ والے کارڈز سے زیادہ محفوظ ہیں اور اسٹیٹ بینک اس معیار پر منتقلی کیلئے تمام تر کوششیں جاری رکھے گا۔

( خبر جاری ہے )

ملتی جلتی خبریں
Comments
Loading...