کراچی سے ملنے والے گدھے غیر ملکیوں کیلئے ذبح کیے گئے: تفتیشی افسر

کراچی کے پوش ترین علاقے کلفٹن سے گدھوں کی باقیات ملنے کی مختلف ویڈیوز موصول ہو گئیں۔

کلفٹن میں ڈرائیونگ لائسنس برانچ کے قریب کچرا کنڈی سے تین گدھوں کے سر اور آلاشیں ملی تھیں جنھیں بعدازاں صفائی کے محکمے سے تعلق رکھنے والے افراد گاڑی میں ڈال کر ساتھ لے گئے تھے۔ ذرائع کا بتانا تھا کہ نامعلوم افراد مبینہ طور پر ذبح کیے گئے گدھوں کے سر اور آلائشیں پھینک کر گئے۔ ذرائع کے مطابق پولیس نے واقعے کا فوری نوٹس لیتے ہوئے مختلف پہلوؤں سے معاملے کی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

کراچی(ویب ڈیسک)کراچی کے پوش ترین علاقے کلفٹن سے گدھوں کی باقیات ملنے کی مختلف ویڈیوز موصول ہو گئیں۔ گزشتہ روز کلفٹن میں ڈرائیونگ لائسنس برانچ کے قریب کچرا کنڈی سے تین گدھوں کے سر اور آلاشیں ملی تھیں جنھیں بعدازاں صفائی کے محکمے سے تعلق رکھنے والے افراد گاڑی میں ڈال کر ساتھ لے گئے تھے۔ ذرائع کا بتانا تھا کہ نامعلوم افراد مبینہ طور پر ذبح کیے گئے گدھوں کے سر اور آلائشیں پھینک کر گئے۔ ذرائع کے مطابق پولیس نے واقعے کا فوری نوٹس لیتے ہوئے مختلف پہلوؤں سے معاملے کی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

تفتیشی ذرائع نے بتایا کہ گدھوں کی باقیات ملنے والی جگہ کی مختلف ویڈیوز حاصل کی ہیں جس میں دیکھا گیا ہے کہ ایک گاڑی گدھےکی باقیات پھینکتی نظر آرہی ہے، جس سے ایسا لگتا ہے کہ گدھے غیر ملکیوں کے لیے ذبح کیے گئے تھے کیونکہ کچھ غیرملکی گدھے کو گوشت کے لیے ذبح کراتے ہیں۔
تفتیشی ذرائع کا کہنا تھا کہ موصول ویڈیوز کو دیکھ کر گدھوں کو ذبح کر کے گوشت فروخت ہونے کے امکانات کم معلوم ہوتے ہیں کیونکہ گوشت بیچنے والے ملزمان باقیات کھلے عام پھینکنے کے بجائے دفن کرتے ہیں۔ ذرائع کے مطابق تفتیشی حکام گاڑی میں نظر آنے والے افراد تک پہنچنے کی کوشش کر رہے ہیں لہذا تفتیش مکمل ہونے کے بعد ویڈیوز اور تفصیلات شیئر کی جائیں گی۔

( خبر جاری ہے )

ملتی جلتی خبریں
Comments
Loading...